کھیل

پہلا گولڈ میڈل لانے والے دین محمد پہلوان کسمپرسی کی حالت میں

 

 

اپنوں کی بے رخی کا شکار دین محمد کی وزیر اعظم سے رہنے کیلئے گھر دینے کی اپیل

 

لاہور(ویوز نیوز)کھیل کے میدانوں میں پاکستان کیلئے پہلا گولڈ میڈل جیتنے والے دین محمد پہلوان کسمپرسی کی زندگی گزارنے پر مجبور۔ دین محمد طویل عرصے بعد حکومت کی طرف سے پانچ لاکھ روپے ملنے پر وزیر اعظم عمران خان کے شکر گزار ہیں ۔

دین محمدنے وزیر اعظم سے رہنے کیلئے گھر دینے کا مطالبہ کیاہے ۔کھیلوں کی دنیا میں پہلی مرتبہ پاکستان کا سبز ہلالی پرچم سر بلند کرنیوالے دین محمد پہلوان اپنوں کی بے رخی کا شکار ہیں ،، 1954 ءکی ایشین گیمز میں پاکستان کیلئے کھیلوں میں پہلا گولڈ میڈل جیتنے والے 95 سالہ دین محمد اپنے چار بیٹوں اور ان کے بچوں کیساتھ چھوٹے سے گھر میں رہنے پر مجبور ہیں۔

چھیاسٹھ سال بعد بھی ایشین گیمز کی کامیابی دین محمد کے ذہن میں تازہ ہے ۔دین محمد اپنا پہلا پاسپورٹ، اپنے میڈلز اور دور پہلوانی کی اپنے زیر استعمال اشیا کو دیکھ پر اپنادل بہلاتے ہیں۔دین محمد کہتے ہیں کہ طویل عرصے بعد ایک کھلاڑی وزیر اعظم کے دور میں پاکستان سپورٹس بورڈ نے امداد کی جس پر وزیر اعظم کا شکر گزار ہوں۔

دین محمد نے وزیر اعظم سے اپیل کہ ان کو رہنے کیلئے گھر یا جگہ دی جائے۔غربت اور کسمپرسی میں زندگی گزارنے والے دین محمد کو ملک کانام روشن کرنے پر فخر ہے ، زندہ قومیں اپنے ہیروز کو ہمیشہ یاد رکھتی ہیں۔

Related Articles

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button