کھیل

پاکستان ٹیم کا عمر رسیدہ کھلاڑی جس کے ہم عصر اب کوچ اور تبصرہ نگار ہیں

جس انگلش ٹیم کے خلاف ڈیبیو کیا وہ ساری ریٹائر ہو چکی، بعد میں آنے والا کھلاڑی پاکستانی ٹیم کا کوچ بن چکا

لاہور (ویوز نیوز) پاکستان کرکٹ ٹیم کے مایہ ناز آل راﺅنڈر شعیب ملک اور دیگر کھلاڑیوں کا سوشل میڈیا پر دلچسپ موازنہ کیا جانے لگا ہے کیونکہ اس وقت قومی ٹی 20 ٹیم میں شامل 3 ساتھی کرکٹرز اس وقت پیدا بھی نہیں ہوئے تھے جب سے سابق کپتان قومی ٹیم کا حصہ ہیں۔

نجی خبر رساں ادارے  کے مطابق قومی ٹیم کے ہیڈکوچ مصباح الحق سے سینئر اور 21 سال سے پاکستان کی نمائندگی کرنے والے شعیب ملک سوشل میڈیا پر موضوع بحث بن گئے، ان کے کیرئیر کو سامنے رکھتے ہوئے موجودہ ٹیم کے کھلاڑیوں کا ان سے موازنہ کیا جارہا ہے۔

38 سالہ شعیب ملک نے 14 اکتوبر 1999 کو قومی ٹیم کیلئے پہلا ون ڈے میچ کھیلا تھا اور اس وقت موجودہ پاکستانی ٹیم کے اہم فاسٹ باﺅلرشاہین شاہ آفریدی، نسیم شاہ اور نوجوان بلے باز حیدر علی اس وقت پیدا بھی نہیں ہوئے تھے۔ شعیب ملک اب تک 35 ٹیسٹ، 287 ون ڈے اور 114 ٹی 20 میچز کھیلنے کا اعزاز رکھتے ہیں اور بدستور قومی ٹیم کا حصہ ہیں۔

شعیب ملک نے جب کیرئیر کا آغاز کیا تو لیگ سپنر شاداب خان، فاسٹ باﺅلر محمد حسنین صرف ایک سال کے تھے، ٹی 20 ٹیم کے کپتان بابر اعظم اور خوشدل شاہ کی عمر ابھی صرف 4,4 سال تھی، فاسٹ باﺅلر حارث رﺅف پانچ، محمد عامر اور محمد رضوان 7,7 سال کے تھے۔ افتخار احمد اور فخر زمان کی عمر 9,9 سال تھی، عماد وسیم 10 سال، سرفراز احمد 12 سال ، وہا ب ریاض 14 سال اور محمد حفیظ 19 سال کے تھے۔

دلچسپ بات یہ ہے کہ قومی ٹیم کے ہیڈ کوچ مصباح الحق بھی شعیب ملک کے دوسال بعد پاکستان ٹیم کا حصہ بنے جبکہ پروفیسر محمد حفیظ نے چار سال بعد اپنی انٹرنیشنل کرکٹ کا آغاز کیا تھا۔ شعیب ملک نے جس انگلش ٹیم کے خلاف اپنا پہلا میچ کھیلا تھا، اس میں سے اب کوئی بھی ٹیم کا حصہ نہیں، ان میں سے مائیکل وان، مائیک ایتھرٹن وغیرہ تو اب عرصے سے کرکٹ پر تبصرہ کررہے ہیں جبکہ بعض کوچ بن چکے ہیں۔

Related Articles

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button