انٹرنیشنلاہم خبریںاہم خبریں

طوطے نے مودی کو شرمندہ کردیا

نئی دہلی(ڈیلی پاکستان آن لائن)انسانوں کو چھوڑیں اب تو پرندے بھی بھارتی وزیراعظم نریندر مودی سے نفرت کرنے لگے ہیں۔ ایک طوطے نے بھارتی وزیراعظم کے ہاتھ پر بیٹھنے سے انکار کر دیا۔

تفصیلات کے مطابق سوشل میڈیا پر ایک ویڈیو تیزی سے وائرل ہورہی ہے جس میں دیکھا جاسکتا ہے کہ ایک پارک میں بھارتی وزیراعظم نریندر مودی طوطے کو اپنے بازو پر بٹھانے کے لیے آگے کرتے ہیں لیکن طوطا سونگھ کر پیچھے ہٹ جاتاہے کیونکہ طوطا بھی جانتا ہے کہ یہ ہاتھ معصوم مسلمانوں کے خون سے رنگے ہیں۔نریندرمودی ڈھٹائی کا مظاہرہ کرتے دوبارہ ہاتھ آگے کرتے ہیں لیکن طوطا پھر پیچھے ہٹ جاتاہے ،مودی شرمندہ ہوکر دوسری طرف چلے جاتے ہیں ۔ اتنی دیر میں طوطے کی ٹرینر خاتون آتی ہے ،وہ اپنا ہاتھ آگے کرتی ہے تو طوطا اس کے ہاتھ پر بیٹھ جاتا ہے۔ مودی کی ڈھٹائی تو پھر آپ کو پتا ختم ہونے کو نہیں وہ دوبارہ ہاتھ آگے کرتے ہیں توطوطا پھر پیچھے ہٹ جاتا ہے جس سے مودی جی کو شدید ہزیمت اور شرمندگی کا سامنا کرنا پڑتا ہے۔
خیر یہ کونسامودی صاحب کے ساتھ پہلی بار ہوا ہے،عالمی سطح پر بھی بے شمار مواقع پر نریندر مودی کی جگ ہنسائی ہوچکی ہے۔

بھارتی حکومت کی جانب سے ویڈیو ہٹانے کی پوری کوشش کے باوجود سوشل میڈیا پر وائرل ہوگئی، سوشل میڈیا پرکھل کر نریندر مودی کا مذاق اڑایاگیا ۔ صارفین کا کہنا تھا کہ یہ پرندہ کا ان لوگوں کے لیے میسج ہے جو نریندر مودی کے ساتھ ہیں۔

Related Articles

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button