کالم/بلاگ

”گھر جنت کیسے بنتا ہے“

آج کل اکثریت شکایت رہتی ہے کہ گھر میں ناچاقی اور فساد رہتا ہے اگر آپ اپنے گھر کو جنت بنانا چاہتے ہیں تو درج ذیل مضمون کو بار بار عمل کی نیت سے پڑھۓ۔
اگر ہم ان باتوں پر سنت کی نیت سے عمل کریں تو ثواب علیحدہ ہو گا اور ان شاء اللہ آپ کا گھر جنت کا نمونہ بن جاۓ گا۔
جوخاوند اپنی بیوی کادل پیار سے نہیں جیت سکا وہ سختی سے ہرگز نہیں جیت سکتا۔
دوسرے الفاظ میں جو عورت اپنے خاوند کو پیار سے اپنا نہ بناسکی وہ تلوار اپنی بد زبانی سے بھی اپنے خاوند کو اپنا نہیں بناسکے گی۔
کٸی مرتبہ عورتیں سوچتی ہیں کہ میں اپنے بھاٸی کو کہوں گی وہ میرے خاوند کو ڈانٹے گا میں اپنے ابو کو بتاٶں گی وہ میرے خاوند کو سیدھا کر دیں گے۔
ایسی عورتیں انتہاٸی بےوقوف ہوتی ہیں بلکہ پرلے درجے کی بےوقوف ہوتی ہےیہ کیسے ہو سکتا ہے کہ آپ کے بھاٸی اور آپ کے باپ ڈانٹیں گے اور آپ کا خاوند ٹھیک ہو جاۓ گا۔
تیسرے بندے کے درمیان میں آنے سے ہمیشہ فاصلے بڑھ جاتے ہیں۔جب آپ نے اپنے خاوند کے معاملے میں ماں باپ کو ڈال دیا تو آپ نے تیسرے بندے کو درمیان میں ڈال کر خودفاصلہ کرلیا،توجب آپ خود اپنے اوراپنے میاں کے درمیان فاصلہ کر چکیں تو اب یہ قرب کیسے ہو گا?
اس لیے اپنے گھر کی باتیں اپنے گھر میں سمٹی جاتی ہیں،لہزا یاد رکھۓ۔
اپناگھونسلہ اپنا کچا ہویا پکا خاوند کے گھر میں اگر فاقہ سے بھی وقت گزاریں گی تو اللہ رب العزت کے یہاں درجے اور رتبے پاٸیں گی اپنے والد کے گھر کی آسانیوں اور نازونعمت کو یاد نہ کرنا، ہمیشہ ایسا نہیں ہوتا بیٹیاں ماں باپ ہی کے گھر میں رہتی ہیں بالاآخر ان کو اپنا گھر بسانا ہوتا ہے۔
اللہ تعالی کی طرف سے جوزندگی کی ترتیب ہے اسی کواپنانا ہوتا ہےتواس لیے اگر خاوندکےگھر میں رزق کی تنگی ہے یا خاوند کی عادتوں میں سے کوٸی عادت خراب ہےتوصبروتحمل کے ساتھ اس کی اصلاح کے بارے میں فکرمند رہیں سوچ سمجھ کر ایسی باتیں کریں۔
خدمت کے ذریعے خاوند کا دل جیت لیں۔ تب آپ جو کچھ بھی کہیں گی خاوند مان لے گا۔
عورتوں کااپنے خاوندوں کے ساتھ اچھابرتاٶ کرنااور ان کی خدمت کرنااوران کی اطاعت فرمانبرداری کرنا بہت ہی قیمتی چیز ہے مگر عورتیں اس سے بہت غافل ہیں صحابہ کرامؓ نے ایک مرتبہ حضور ﷺکی خدمت اقدس میں عرض کیا کہ عجمی لوگ اپنے بادشاہوں کو سجدہ کرتے ہیں۔
آپ اس کے زیادہ مستحق ہے کہ ہم آپ کو سجدہ کریں حضورﷺنے فرمایاکہ میں اللہ کے سواۓ کسی کو سجدہ کا حکم کرتا تو عورتوں کو حکم کرتاکہ اپنے خاوندوں کو سجدہ کریں۔
ایک حدیث مبارکہ میں کہ محبوبﷺنے فرمایاکہ جوعورت ایسی حالت میں مرے کہ خاوند اس سے راضی ہو وہ جنت میں جاٸیگی۔
حضرت عاٸشہ رضی اللہ تعالی عنھا فرماتی ہیں کہ میں حالت حیض میں پانی پیتی پھر برتن رسولﷺکو پکڑا دیتی رسولﷺاسی جگہ منہ رکھتے جہاں میں نے منہ لگایا ہوتا پھرآپﷺپانی نوش فرماتے اورمیں گوشت والی ہڑی چباتی پھرآپﷺکو تھمادیتی آپﷺوہیں منہ لگاتے جہاں میرامنہ لگا ہوتا حالانکہ میں حالت حیض میں ہوتی تھی۔(مسلم)
رسولﷺنے فرمایا عورت پانچ وقت کی نماز پڑھتی رہے وہ رمضان کے روزے رکھ لیا کرے اوراپنی آبروکی حفاظت رکھے اور خاوند کی تابعداری کرے توایسی عورت جنت میں جس دروازے سے چاہے داخل ہو جاۓ۔

Related Articles

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button