کالم/بلاگ

”کشمیر جنت کی مثل“

ہر سال 5فروری کو پاکستان میں قومی سطح پر کشمیر کےمظلوم مسلمانوں کے ساتھ اظہار یکجہتی کے لیے تعطیل ہوتی ہےکشمیری مسلمانوں کی تحریک آزادی کی حوصلہ افزاٸی کے لیے جلوس اور احتجاج ریلیاں منعقد کی جاتی ہیں۔
اس سال 2021کو بھی5فروری کو پاکستان سمیت دنیا بھر کے مسلمانوں نے اپنے کشمیری بھاٸیوں کے ساتھ شاندار یکجہتی کا مظاہرہ کرۓ گے
کشمیر کی دلفریب اور حسین وادیوں میں ہر سو بارود کی بو پھیلی ہوٸی ہے جہاں کھیتوں میں زعفران اگتا تھا اب وہاں سے ماٸن اور کھلونا بم کشمیری مسلمانوں
کی زندگیاں چھین رہے ہیں۔
خوبصورت باغات میں جہاں خوبانی، اخروٹ اور دنیا کا سب سے قیمتی سیب پیدا ہوتا تھا اب وہاں بھارتی فوجیوں کی نحوست اور کشمیری مسلمانوں کے کٹے ہوۓاعضا ٕ بکھرے ہوۓ دکھاٸی دیتے ہیں۔
بھارت نے کشمیر کی جنت نظیر وادی کو جہنم بنا دیا ہے مگر اس سب کچھ کے باوجود عالمی ضمیر بیدار نہیں ہوا عالمی طاقتیں ظلم کےان اندھیروں کو مزید بھیانک بنانے کے لیے مکمل طور پر بھارت کی پشت پناہی کر رہی ہیں۔
کشمیر میں لاکھوں کی تعداد میں بھارتی جبر کا شکار ہو چکے ہیں، لاکھوں کی تعداد میں ہجرت کر کے دنیا کے مختلف خطوں میں ٹھوکریں کھا رہے ہیں۔
کشمیر دنیا کا واحد خطہ ہے جہاں سب سے زیادہ انسانیت کی تزلیل ہو رہی ہے اور سب سے زیادہ عسکری کارواٸیوں کے ذریعہ نہتے شہریوں کو موت کے گھاٹ اتار دیا جاتا ہے۔
ہندوستان کی ظالم افواج نے کشمیری مسلمانوں کی جدوجہد آزادی کو ختم کرنے کے لیے دنیا کے غیر مسلم ممالک سے خفیہ رابطے کیے۔
لیکن قربان جاٶں ہمارے حکمران ایک تقریر کر کے پاٶں زمین پر نہیں
تھوڑا آگے بڑ کر کچھ دیر کھڑے ہو کر کشمیر کے مسلمانوں کے ساتھ مزاق ریاست مدینہ کے دعوے کرنے والوں ذرہ محبوبﷺ کی زندگی کا مطالعہ کر لیتے آپ کو پتہ چل جاتا آزادی کھڑے ہونے سے نہیں تقریر کرنے سے نہیں بلکہ تلوار کو ہاتھ میں لے کر آسمان کی طرف بلند کر کے نعرہ تکبیر لگا کر آزادی حاصل ہوتی ہے۔
ہم نے اسلامی ممالک سے کشمیر کے بارے میں رابطہ کی تکلیف نہ کی ہوش کے ناخن لو یہ وقت اللہ نہ کرے ہم پر بھی آسکتا ہیں۔
بھارتی فوج نے کتنےہی کشمیریوں کو شہید کیا
کتنے گھر اجاڑے، کتنے بچے ظلم کا نشانہ بنے اور کتنی ہی بہنوں اور بیٹیوں کو ہوس کا نشانہ بنایا، اس کی صحیح تعداد ان ظالموں کو بھی معلوم نہیں ہوگی مگر اس کے باوجود اب بھارتی فوجی افسر، دانشور، خفیہ ایجنسیوں کے اہلکار اور سیاستدان تسلیم کرتے ہیں کہ کشمیری مسلمانوں کی قربانیوں اور حوصلہ کو شکست دینا ناممکن ہے5فروری کو پاکستان اور مقبوضہ کشمیر سمیت دنیا بھر کے مسلمانوں نے کشمیریوں کے ساتھ جس والہانہ انداز میں یکجہتی کرتے ہیں بھارت کے لیے وہ نوشتہ دیوار کی حثیت رکھتا ہے احتجاج مظاہرے ہڑتال اور جلسے جلوسوں کے زریعہ زندگی کے ہر شعبہ سے تعلق رکھنے والے مسلمانوں نے عزم کا اظہار کیا ہے کہ وہ ہر قیمت پر کشمیر کے مظلوم مسلمانوں کی دامے، درمے، سخنے تعاون جاری رکھیں گے کشمیر کے مسلمان اپنے آپ کو تنہا نہ سمجھیں بلکہ دنیا بھر کے کروڑوں مسلمان ان کی جدوجہد کے لیے ان کے شانہ بشانہ اپنا کردار ادا کریں گے
یوم یکجہتی کشمیر کے حوالے سے جہاں مظاہروں ہڑتالوں اور احتجاجوں کے ذریعہ دنیا بھر کے مسلمانوں نے اپنے بھاٸیوں کے ساتھ اتحاد و یگانگت اور اخوت کا بھرپور اظہار کیا
یاد رکھو کشمیر جب بھی آزاد ہوا جہاد فی سبیل للہ سے ہو گا
دوسری طرف مسلم حکمران اقتدار طبقہ کفر کی ہاں میں ہاں ملا کر حق کو چھپانے کی کوشش نہ کرے شہدا ٕ اور غازیوں کے ساتھ غداری کے ارتکاب سے بچیں بلکہ سچاٸی اور حق کا ساتھ دے موت وحیات کا اختیار صرف اللہ کو ہے باطل قوتیں کچھ نہیں بگاڑ سکتی اسلامی ممالک کے مسلمان حکمران بھی جرات کا مظاہرہ کریں تو ظلم کی یہ سیاہ رات بہت جلد ختم ہو سکتی ہے

Related Articles

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button